بیرونی دنیا سے تعلقات میں آبرومندی اورملک و ملت کے مفاد کو بنیادی حیثیت دی جائے،علامہ ناصر عباس جعفری

22 آذار/مارس 2012

nasir abbas jafriاسلام آباد۔مجلس وحدت مسلمین پاکستان کےسیکرٹری جنرل علامہ ناصر عباس جعفری نے کہا کہ ملکی تاریخ میں پہلی مرتبہ خارجہ پالیسی کا تعین کیا جارہا ہے جو کہ انتہائی خوش آئند ہے ۔ ضرورت اس امر کی ہے کہ خارجہ پالیسی ترتیب دیتے وقت بیرونی دنیا سے تعلقات میں آبرومندی اور ملک وملت کے مفاد کو بنیادی حیثیت دی جائے ۔ پارلیمنٹ میں عالمی دبائو کے باوجود چین اور روس کے ساتھ تعلقات اور پاک ایران گیس پائپ لائن منصوبہ پر بحث ہونامستقبل میں خود اعتمادی کیلئے پہلا قدم ہے۔مرکزی دفتر مجلس وحدت

مسلمین پاکستان سے جاری ہونے والےبیان کے مطابق علامہ ناصر عباس جعفری نے کہا کہ نیٹو سپلائی کی بحالی ملک و ملت کے ساتھ سنگین زیادتی ہوگی ، جس کیخلاف بھرپور احتجاج کیا جائیگا کیونکہ امریکہ نے سلالہ چیک پوسٹ پر حملہ اور پاک فوج کے جوانوں کی شہادت پر نہ تو معافی مانگی ہے اور نہ ہی ذمہ داروں کیخلاف کوئی کاروائی کرنے کا ارادہ ظاہر کیا ہے جبکہ دوسری طرف ڈرون حملے بھی وقفے وقفے سے جاری ہیں ان حالات میں نیٹو سپلائی کی بحالی کا فیصلہ قوم قبول نہیں کرے گی۔پارلیمنٹ خارجہ پالیسی متعین کرتے وقت ملک وملت کی اُمنگوں اور خواہشات کا خیال رکھے، دنیا میں سربلندی و سرفرازی کے ساتھ جینا صرف اسی صورت میں ممکن ہے کہ ہماری خارجہ پالیسی آزاد اور خودمختار ہو۔

ترك تعليقك

مجلس وحدت مسلمین پاکستان

مجلس وحدت مسلمین پاکستان ایک سیاسی و مذہبی جماعت ہے جسکا اولین مقصد دین کا احیاء اور مملکت خدادادِ پاکستان کی سالمیت اور استحکام کے لیے عملی کوشش کرنا ہے، اسلامی حکومت کے قیام کے لیے عملی جدوجہد، مختلف ادیان، مذاہب و مسالک کے مابین روابط اور ہم آہنگی کا فروغ، تعلیمات ِقرآن اور محمد وآل محمدعلیہم السلام کی روشنی میں امام حسین علیہ السلام کے ذکر و افکارکا فروغ اوراس کاتحفظ اورامر با لمعروف اور نہی عن المنکرکا احیاء ہمارا نصب العین ہے 


MWM Pakistan Flag

We use cookies to improve our website. Cookies used for the essential operation of this site have already been set. For more information visit our Cookie policy. I accept cookies from this site. Agree